The Latest

وحدت نیوز(لاہور) مجلس وحدت مسلمین سنٹرل پنجاب کی ورکنگ کمیٹی کا اجلاس زیر صدارت ملک اقرار حسین وحدت ھاؤس لاھور میں  منعقد ھوا ۔

 اجلاس میں پنجاب کی تنظیمی صورتحال پہ تفصیلی گفتگو کے بعد یہ فیصلہ کیا گیا کہ پنجاب کے تمام اضلاع کے دورہ جات کیے جائیں گے اور دستوری تقاضوں کے مطابق اضلاع کا جائزہ لیا جائے گا ۔

 اجلاس میں دیگر اراکین بشمول علامہ عبد الخالق اسدی ، علامہ سید حسن رضا ہمدانی ، بردار سید حسن کاظمی اور آصف رضا ایڈووکیٹ نے بھی شرکت کی۔

کمیٹی نے چیئرمین مجلس وحدت مسلمین پاکستان علامہ راجہ ناصرعباس جعفری کے اس فیصلے پہ مکمل اعتماد کا اظہارکرتے ھوئے اس بات کا عہد کیا کہ صوبہ میں بھرپور تنظیمی فعالیت انجام دی جائے گی۔

وحدت نیوز(کراچی) گلشن حدید سے مرکزی جامع مسجد جعفریہ وامام بارگاہ کمپلیکس کی انتظامیہ انجمن غلامان آل رسولؐ کے صدر فرحت عباس ،محب علی ہسیبانی، فوکل پرسن نجم مغل ، شہزاد چوہدری اور حیدر رضوی کی وحدت ہاؤس ضلعی سیکریٹری ایم ڈبلیوایم ملیر آمد ، ضلعی صدر مجلس وحدت مسلمین سید احسن عباس رضوی سمیت دیگر رہنماؤں سے ملاقات۔

وفد نے پاکستان اسٹیل ملز انتظامیہ خصوصاً CEO شجاع حسین خوارزمی کی مرکزی جامع مسجد جعفریہ وامام بارگاہ کمپلیکس کے انتظامی امور عشرہ محرم الحرام میں بلاجواز رکاوٹوں اور بے جا مداخلت کے خلاف ٹھوس اور واضح موقف اختیار کرنے پرمجلس وحدت مسلمین اور ضلعی صدر سید احسن عباس رضوی کا شکریہ اداکیا، ضلعی صدر نے کہا کہ یہ ہمارا قومی و ملی فریضہ ہے ، عزاداری ہے تو ملی تنظیموں کا وجود باقی ہے ورنہ ایسی تنظیم یا عہدہ کس مصرف کا جو عزاداری کا تحفظ یا دفاع نہ کرسکے۔

انہوں نے کہا کہ ہم مسجد وبارگاہ انتظامیہ کے ہرجائزموقف کی تائید کرتے ہیں اور ہر لمحہ ان کے شانہ بشانہ کھڑے رہیں گےاورانتظامیہ کے غیر منطقی اور ناقابل برداشت اقدامات کے مقابل ڈٹے رہیں گے ۔ اس موقع پر ایم ڈبلیوایم کے رہنما علی احمر زیدی اور شعیب رضا رضوی بھی موجود تھے ۔

وحدت نیوز(لاہور) مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کی رہنما اور رکن پنجاب اسمبلی محترمہ سیدہ زہرا نقوی نے کہا کہ موجودہ حکومت نے عوام کو مہنگائی کے ہاتھوں خوار کر دیا ہے ، اتحادی جماعتیں خاص ایجنڈے پر حکومت میں آئی ہیں ان کو عوام کے مسائل سے کوئی سروکار نہیں یہ ہی وجہ ہے کہ ملک میں پٹرولیم کی مصنوعات کی قیمتوں میں ہوشرنا اضافہ اور مہنگائی کا جن عوام کو نگل رہا ہے لیکن حکمرانوں کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگ رہی۔

 میڈیا سیل سے جاری اپنے ایک بیان میں ان کا کہنا تھا کہ امپورٹڈ حکومت نے ملک کو مہنگائی کی بلند ترین سطح تک پہنچا دیا ھے اسکی نظیر ماضی کی کسی حکومت میں نہیں ملتی حکومت عوام کی زندگیوں میں آسودگی لانے کے بجائے مشکلات میں مزید اضافہ کررہی ہے ،عوام کا جسم اور روح کا رشتہ برقرار رکھنا مشکل ہوتا جا رہا ہے۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کےوائس چیئرمین علامہ احمد اقبال رضوی نے کہا ہے کہ موجودہ حکومت اپنی ناکامیوں کا الزام دوسروں پرلگانے کی بجائے انتظامی معاملات کو بہتر بنانے کی طرف توجہ دے۔پوری قوم مہنگائی، بے روزگاری اور معاشی عدم استحکام کا شکار ہے۔قانون نافذ کرنے والے ادارے مجرموں کے سامنے بے بسی کی تصویر بنے ہوئے ہیں۔سٹریٹ کرائمز کی شرح میں غیر معمولی اضافہ عدم تحفظ کے احساس میں اضافے کا باعث بن رہا ہے۔پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے نے ملک میں بسنے والے تمام طبقات کو شدید متاثر کیا ہے۔

ان کاکہنا تھا کہ مسلسل لوڈ شیڈنگ کے باعث صنعتکار اپنی فیکٹریاں بند کرنے پر مجبور ہو رہے ہیں۔اشیائے خورد ونوش پر سبسڈی کے نام پر یوٹیلیٹی اسٹورز کے سامنے متوسط طبقے کو گھنٹوں قطار میں کھڑا کر کے تحقیر کی جاتی ہے۔حکومت کو عوام کے مسائل سے کوئی سروکار نہیں۔امپورٹڈ حکومت کا سارا زور اپنا اقتدار بچانے اور انتقامی کارروائیوں پر سرف ہو رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ جو حکومت عوامی مینڈیٹ حاصل کرنے کی بجائے چور دروازے سے اقتدار تک رسائی حاصل کرے اس کے دن گنے چنے ہوتے ہیں۔ملک و قوم کی ترقی اور استحکام کے لیے عملی اقدامات کی بجائے زبانی دعوے نون لیگ کا شروع سے وتیرہ رہا ہے۔عوام موجودہ حکومت کی اصلیت سے آگاہ ہو چکے ہیں۔اگلے قومی انتخابات میں موجودہ حکومت کو مسترد کر کے اپنے ساتھ ہونے والی زیادتیوں کا عوام بھرپور انتقام لیں گے۔

وحدت نیوز(پشاور)مجلس وحدت مسلمین صوبہ خیبر پختونخوا کے انٹرا پارٹی الیکشن میں علامہ جہانزیب علی جعفری کو آئندہ تین سال کیلئے ایم ڈبلیو ایم کا صوبائی صدر منتخب کرلیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق مجلس وحدت مسلمین پاکستان صوبہ خیبر پختونخوا کے دو روزہ کنونشن جامعہ شہید عارف الحسینی پشاور میں منعقد ہوا، جس میں سابق صوبائی کابینہ، تمام اضلاع سے تنظیمی نمائندے اور مرکز کی جانب سے چئیرمین علامہ راجہ ناصر عباس جعفری اور مرکزی سیکرٹری تنظیم سازی علامہ مقصود ڈومکی نے شرکت کی۔

کنونشن کے پہلے روز شب شہداء کا اہتمام کیا گیا، جس سے علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے خصوصی خطاب کیا۔ جبکہ دوسرے روز انٹرا پارٹی الیکشن کے موقع پر علامہ وحید عباس کاظمی نے دستوری تقاضوں کے مطابق خطاب کے بعد اپنی کابینہ سمیت مستعفی ہونے کا اعلان کیا۔

جس کے بعد انٹرا پارٹی الیکشن منعقد ہوئے، مرکزی سیکرٹری تنظیم سازی علامہ مقصود ڈومکی نے 3 نام صوبائی شوریٰ کے سامنے پیش کیے، جن میں علامہ جہانزیب علی جعفری، علامہ سید وحید عباس کاظمی اور علامہ ارشاد علی کا نام شامل تھا۔ جن پر باقاعدہ ووٹنگ ہوئی، جس کے نتیجے میں علامہ جہانزیب علی جعفری آئندہ تین سال کیلئے ایم ڈبلیو ایم خیبر پختونخوا کے نئے صدر منتخب ہوگئے، اس موقع پر علامہ مقصود ڈومکی نے نومنتخب صوبائی صدر سے ان کے عہدے کا حلف لیا۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے نو منتخب صدر ایم ڈبلیوایم کے پی کےعلامہ جہانزیب علی جعفری نے کہا کہ میں تمام تنظیمی دوستوں کا شکریہ ادا کرتا ہوں جنہوں نے مجھ پر اعتماد کیا اس الہی تنظیم کے ذریعے ملک و ملت کے لئے جدوجہد عظیم عبادت اور میرے لئے باعث اعزاز ہے۔

وحدت نیوز(پشاور) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکریٹری امور تنظیم سازی علامہ مقصود علی ڈومکی نے مدرسہ شہید علامہ سید عارف حسین الحسینـیـؒ پشاور میں منعقدہ ایم ڈبلیوایم خیبر پختونخواہ کے صوبائی راہیان کربلا کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ مجلس وحدت مسلمین پاکستان قائد شہید علامہ عارف حسین الحسینی رحمۃ اللہ علیہ کے افکار و اھداف کی روشنی میں جدوجہد کر رہی ہے ،ہم شہید قائد کے چھوڑے ہوئے مشن کی تکمیل چاہتے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہم قائد شہید کی مقتل گاہ پر یہ عہد کرتے ہیں کہ ملک و ملت سے کبھی خیانت نہیں کریں گے بلکہ اس خلوص اور جرئت سے جہد مسلسل کریں گے کہ قائد شہید کی پاکیزہ روح ہم سے راضی ہو جائے۔انہوں نے کہا کہ قائد شہید کی برسی کے موقع پر اسلام آباد میں حضرت امام زمانہ علیہ السلام سے تجدید بیعت کے لئے ملک گیر مہدی برحق کانفرنس منعقد ہوگی۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے چیئرمین علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے سینئر صحافی و کالم نگار ایاز امیر پر حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے ذمہ داران کے خلاف فوری کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔علامہ راجہ ناصرعباس کا ایازامیر کو ٹیلیفون ان کی خیریت دریافت کی اور اظہار یکجہتی بھی کیا۔

انہوں نے کہا کہ ایاز امیر کو سچ بولنے کی سزا دی گئی ہے۔حق کی آواز دبانے کے لیے بالادست قوتوں کا ہمیشہ سے یہی چلن رہا ہے۔ اس ظلم کے خلاف آواز بلند کرنے کی ذمہ داری صرف صحافی برادری کی نہیں۔ ہر باضمیر و حق پرست کو واقعہ میں ملوث عناصر اور ان کے سرپرستوں کے خلاف بھرپور احتجاج کرنا چاہئیے۔اس طرح کی غنڈہ گردی اور بھونڈی کوششوں سے حقائق کو دبایا نہیں جا سکتا۔چور دروازے سے داخل ہونے والے صاحبان اقتدار حق پرستوں سے ہمیشہ خائف رہے ہیں ۔واقعہ کربلا سے لے کر آج تک تاریخ اس بات کی گواہ ہے کہ ظالموں کو ملنے والی عنایات عارضی اور ان کے لیے لعنت کا طوق دائمی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایاز امیر پر حملے سے اس تاثرکو تقویت ملی ہے کہ پاکستان میں کسی بھی شریف شخص کی جان و مال محفوظ نہیں۔اگر حکومت آئین و قانون کی بالادستی چاہتی ہے تو مجرموں کو انصاف کے کٹہرے میں لا کر سخت سزا دی جائے۔

علاوہ ازیں علامہ راجہ ناصرعباس نے ایاز امیر سے ٹیلیفونک رابطہ کرکے ان کی خیریت دریافت کی اور ان کے ساتھ رونما ہونے والے واقعے کی مذمت کرتے ہوئےان کے ساتھ مکمل ہمدردی اور یکجہتی کو اظہار بھی کیا۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کی نصاب کمیٹی کے کنوینئر علامہ مقصود علی ڈومکی نے کہا ہے کہ اسلامی نظریاتی کونسل نے درود شریف کے معاملے پر متنازع فیصلہ دے کر پاکستان کے کروڑوں مسلمانوں کی توہین کی ہے۔ اسلامی نظریاتی کونسل کو مسلکی اور فرقہ وارانہ کونسل میں تبدیل کرنا انتہائی افسوسناک ہے۔اسلامی نظریاتی کونسل کے چیئرمین اور اراکین سے یہ توقع کی جا رہی تھی کہ وہ پاکستان کے اندر فرقہ وارانہ ہم آہنگی اور وسعت نظری کا مظاہرہ کریں گے مگر افسوس کے ساتھ کہنا پڑتا ہے کہ متعصبانہ فرقہ وارانہ سوچ کے حامل چیئرمین اور اراکین نے اس ادارے کو اسلامی نظریاتی کونسل سے فرقہ وارانہ تنگ نظر مسلکی نظریاتی کونسل میں تبدیل کر دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ کونسل کے فیصلے پر ملت جعفریہ کو شدید تحفظات ہیں۔ اسلامی نظریاتی کونسل اپنے رویے اور اپنے فیصلوں پر تجدید نظر کرے ورنہ پاکستان کے کروڑوں اہل تشیع اور اہل سنت محبان اہلبیت اسلامی نظریاتی کونسل سے لاتعلقی کا اظہار کریں گے۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے انتہائی نالائقی کا مظاہرہ کرتے ہوئے کروڑوں اہل تشیع کے لئے فقط ایک نمائندہ مقرر کیا ہے۔ آئینی اداروں میں اھل تشیع کو متناسب اور مناسب نمائندگی سے محروم کیا گیا ہے جس کے باعث یہ ادارہ اب مکمل طور پر متنازعہ ادارہ میں تبدیل ہو چکا ہے۔ اگر اکثریت رائے سے فیصلے کرکے پاکستان کی دوسری بڑی اکثریت یعنی اھل تشیع کے نقطہء نظر کو نظر انداز کیا گیا تو اسلامی نظریاتی کونسل اپنی حیثیت کھو دے گا۔

وحدت نیوز(اسلام آباد)مجلس وحدت مسلمین پاکستان کی نصاب کمیٹی کے کنوینئر علامہ مقصود علی ڈومکی نے کہا ہے کہ اسلامی نظریاتی کونسل نے درود شریف کے معاملے پر متنازع فیصلہ دے کر پاکستان کے کروڑوں مسلمانوں کی توہین کی ہے۔ اسلامی نظریاتی کونسل کو مسلکی اور فرقہ وارانہ کونسل میں تبدیل کرنا انتہائی افسوسناک ہے۔اسلامی نظریاتی کونسل کے چیئرمین اور اراکین سے یہ توقع کی جا رہی تھی کہ وہ پاکستان کے اندر فرقہ وارانہ ہم آہنگی اور وسعت نظری کا مظاہرہ کریں گے مگر افسوس کے ساتھ کہنا پڑتا ہے کہ متعصبانہ فرقہ وارانہ سوچ کے حامل چیئرمین اور اراکین نے اس ادارے کو اسلامی نظریاتی کونسل سے فرقہ وارانہ تنگ نظر مسلکی نظریاتی کونسل میں تبدیل کر دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ کونسل کے فیصلے پر ملت جعفریہ کو شدید تحفظات ہیں۔ اسلامی نظریاتی کونسل اپنے رویے اور اپنے فیصلوں پر تجدید نظر کرے ورنہ پاکستان کے کروڑوں اہل تشیع اور اہل سنت محبان اہلبیت اسلامی نظریاتی کونسل سے لاتعلقی کا اظہار کریں گے۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے انتہائی نالائقی کا مظاہرہ کرتے ہوئے کروڑوں اہل تشیع کے لئے فقط ایک نمائندہ مقرر کیا ہے۔ آئینی اداروں میں اھل تشیع کو متناسب اور مناسب نمائندگی سے محروم کیا گیا ہے جس کے باعث یہ ادارہ اب مکمل طور پر متنازعہ ادارہ میں تبدیل ہو چکا ہے۔ اگر اکثریت رائے سے فیصلے کرکے پاکستان کی دوسری بڑی اکثریت یعنی اھل تشیع کے نقطہء نظر کو نظر انداز کیا گیا تو اسلامی نظریاتی کونسل اپنی حیثیت کھو دے گا۔

وحدت نیوز(اسلام آباد)مجلس وحدت مسلمین پاکستان کی مرکزی عزاداری کونسل کے کنوینئرعلامہ مقصود علی ڈومکی نے کہا ہے کہ نواسہ رسول حضرت امام حسین علیہ السلام نے میدان کربلا میں دین اسلام کی بقاء و سربلندی کے لئے جو بے مثال قربانی دی وہ آج بھی اھل حق کے لیے مشعل راہ ہے۔ کربلا ہر دور کے انسان کی ضرورت ہے اور کربلائی ہر دور میں باطل طاغوت کے خلاف سربکف ہو کر نکلتا ہے۔ عشق حسین و ذکر حسین علیہ السلام بقائے دین کی ضمانت ہے۔

انہوں نے کہا کہ مجلس وحدت مسلمین پاکستان نے ملت کی نمائندہ جماعت کی حیثیت سے ملک بھر میں عزاداری کونسل تشکیل دی ہیں جو عزاداری سید الشہداء علیہ السلام کو مقصد کربلا سے ھماھنگ کرنے کے ساتھ ساتھ عزاداری کی راہ میں حائل رکاوٹیں دور کریں گے۔ حکومت اور انتظامیہ کی ذمہ داری بنتی ہے کہ وہ محرم الحرام کی میٹنگز کو خانہ پوری کی بجائے موثر انداز میں منعقد کریں۔ ملت کی نمائندہ جماعتوں اور نمائندہ شخصیات کی شرکت کے بغیر انتظامیہ کی میٹنگز بے نتیجہ رہتی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مجلس وحدت مسلمین یوتھ ونگ اور رضا کار ملک میں امن و امان کی صورتحال کے پیش نظر قیام امن کے سلسلے میں پولیس اور انتظامیہ کے ساتھ مل کر عزاداروں کے تحفظ کے لئے اپنی خدمات انجام دیں۔انہوں نے کہا کہ عزاداری عبادت ہے اور یہ ہمارا آئینی حق ہے عزاداری میں رکاوٹیں اور پابندیاں ناقابل قبول ہیں پنجاب میں عزاداروں کے خلاف ایف آئی آرز کا سلسلہ اب بند ہونا چاہئے یہ ملت عزاداری پر قدغن برداشت نہیں کرے گی۔ مجلس وحدت مسلمین ملک بھر میں علماء خطباء ذاکرین اور بانیان مجالس پر مشتمل عزاداری کانفرنسز منعقد کر رہی ہے۔ علماء خطباء و ذاکرین قوم کو مقصد کربلا سے آگاہ کرنے کے ساتھ ساتھ عصر حاضر کی یزیدیت کو بے نقاب کریں۔د

ر ایں اثناء علامہ مقصود علی ڈومکی نے مرکزی عزاداری کونسل کے لئے برادر عارف حسین الجانی، علامہ برکت علی مطہری ،برادر ملک اقرار حسین ،برادر ارشاد بنگش، آصف رضا ایڈووکیٹ، سید علی اکبر شاہ کو نامزد کیا جبکہ مرکزی عزاداری کونسل میں ہر صوبے سے مزید دو نمائندے لئے جائیں گے۔ مرکزی عزاداری کونسل کی جانب سے ملک بھر کے صوبائی سیکرٹری داخلہ آئی جی پولیس اور وفاقی وزیر داخلہ کو خط لکھ کر عزاداری میں درپیش مسائل کی نشاندھی کی گئی ہے۔

Page 1 of 1233

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree